آسٹریلیا: پیسے بٹورنے کے لیے کینسر کی مریضہ کا ڈھونگ کرنے والی خاتون کو جیل ہوگئی

0
240

میلبورن: خود کو کینسر کی مریضہ ‌ظاہر کرکے رشتہ داروں اور دوستوں سے رقم بٹورنے والی آسٹریلوی خاتون کو عدالت نے جیل بھیج دیا۔

تفصیلات کے مطابق چوبیس سالہ ہینا ڈکنسن نے شاپنگ اور خرچے پورے کرنے کے لیے ایک انوکھی ترکیب سوچی اور اپنے بارے میں‌ خاندان میں جھوٹی خبر پھیلادی کہ اسے کینسر کا مرض لاحق ہوگیا ہے۔

خاتون نے اپنے والدین کے دوستوں سے کہا کہ وہ کینسر کے علاج کے لیے بیرون ملک جانا چاہتی ہے اور ان سے 42 ہزار آسٹریلوی ڈالرز حاصل کرکے ساری رقم چھٹیاں گزارنے اور پارٹیوں پر خرچ کردی۔

میلبورن مجسٹریٹ کی عدالت نے اس واقعے کو قابل نفرت قرار دیتے ہوئے دھوکا دہی کی ملزمہ کو تین ماہ کے لیے جیل بھیج دیا۔ ملزمہ پر سات الزامات عائد کیے گئے تھے، جن کے تحت اپنا فیصلہ کرتے ہوئے جج نے کہا کہ ملزمہ نے انسانی ہمدردی کے جذبے کی توہین کی ہے اس لیے اس کے ساتھ درگزر کا رویہ اختیار نہیں کیا جاسکتا۔

کنوارہ بن کر فراڈ‌ کرنے والے شخص کے خلاف چوتھی بیوی کی قانونی درخواست

خود کو کینسر زدہ ظاہر کرکے دھوکے سے رقمیں‌ بٹورنے والی خاتون کا پردہ اس وقت فاش ہوا جب مالی مدد کرنے والے ایک شخص نے فیس بک پر اس کی پارٹی کی تصاویر دیکھیں، اس نے پولیس میں‌ رپورٹ کرکے اپنے شبہے کا اظہار کردیا۔

اس واقعے سے ظاہر ہوتا ہے کہ خود کو بیمار ظاہر کرکے دوسروں کو لوٹنے والے دنیا کے کسی بھی ملک میں ہوسکتے ہیں، البتہ مذکورہ آسٹریلوی خاتون نے اپنے ہی والدین اور ان کے دوستوں کو لوٹ کر ایک نئی افسوسناک مثال قائم کی۔


 خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

The post آسٹریلیا: پیسے بٹورنے کے لیے کینسر کی مریضہ کا ڈھونگ کرنے والی خاتون کو جیل ہوگئی appeared first on ARYNews.tv | Urdu – Har Lamha Bakhabar.